Leave a comment

دل کے ارمان تھریڈ میں بہہ گئے

عزیزو دوستو ساتھیو۔۔۔۔۔۔مجھے تو یقین ہی نہیں آیا جب مجھے مہک نے بتایا کہ میرے اعزاز میں ایک تھریڈ بنا رہی تھی مگر فضہ بالکل سلطان راہی کی طرح نازل ہوئی اور کہنے لگی۔۔۔”اوووووووووووووووئے ای تھریڈ نہیں بن سکدا ۔۔۔میں بوٹیاں لا دیاں گی جنھیں تھریڈ  بنان دی کوشش کیتی ” اور پھر وہ تھریڈ فضہ کے ہاتھوں وقوع پذیر ہوا۔

ہمیں حیرت تو ہوئی کہ ہمارے خیال میں ہماری ابھی 999 پوسٹس تھیں۔ اور 990 کے بعد ہم ہر پوسٹ کے بعد چیٹ باکس میں بھی جھانکتے تھے کہ کب ہمارا کارنامہ وہاں نمایاں ہوتا ہے اور ہم اس کی سکرین شاٹ لے کے اسے ہمیشہ کے لئے محفوظ کر لیں۔ ہماری کئی کئی دوستوں کے کار ہائے نمایاں کئی کئی بار چیٹ باکس میں نظر پڑے سو ہمارا بھی خیال تھا کہ 2، 4 پوسٹس کی رعایت تو ہمیں چیٹ باکس دے گا ہی۔ اور یہ کوئی خواہ مخواہ کی توقع نہیں تھی بلکہ ابتدائی اراکین مین سے ایک ہونے کے ناطے ہمارا حق بھی تھا مگر چیٹ باکس بھی کمینگی سے باز نہ آیا۔ اس نے ہماری ان خدمات کو بھی فراموش کر دیا جو ہم نے اس وقت زندہ اور توانا رکھنے میں صرف کی تھیں جب کوئی ادھر کا رخ ہی  نہیں کرتا تھا۔ خیر دنیا کا چلن یہی  ہےسو ہمیں چیٹ باکس سے کچھ گلہ نہیں- مگر اس کا نقصان یہ ہوا کہ ہمیں آج تیسرے دن اس سانحے کا پتی چلا۔

ایسا نہیں ہے کہ فضہ نے ہمیں دھاگہ ٹیگ نہیں کیا تھا۔ یقینًا کیا تھا مگر ہمیں نے اس پر چشم التفات مرحمت نہیں فرمائی۔ وجہ ظاہر ہے کہ اس کا عنوان ہی عجیب تھا۔۔۔۔”پوسٹنگ کاایک اور ریکارڈ کس کا” ۔ ہمیں تو نام سے ہی اندازہ ہو گیا تھا کہ یہاں تیرا کوئی ذکر نہیں ابن ریاض۔ یہ ضرور نائلہ نکمی یا کسی اور حرکت ہو گی۔ پڑھا تو تبصرہ بھی کرنا پڑے گا اور مزید پوسٹس بڑھ جائیں گی سو دیکھو ہی نہ۔

ہوتا یوں کہ ہر روز ہمیں چالیس پچاس پوسٹس ٹیک کر دی جاتی ہیں۔ ٹیگنگ ہماری نظر میں گداگری کی مانند ہے۔” اک پوسٹ کا سوال ہے بابا۔۔۔ کچھ نظر کرم کی بھیک ملے”۔۔۔۔۔۔ اب ہم ہر ایک پر تبصرہ شروع کر  دیتے تو اب تک ہماری اتنی پوسٹس ہو چکی ہوتیں کہ نائلہ کی  آنکھیں چندھیا جاتیں۔ سو ہم واضح کر دیں کہ ہم ہر ٹیگ پر تبصرہ نہیں کرتے۔ ہر پانچویں دسویں پوسٹ ہی ہماری نظر کرم کی سزاوار ٹھہرتی ہے۔ تا ہم اس میں کلام نہیں کہ ہماری آخری 100 پوسٹس کی تیز رفتاری کا سبب ٹیگنگ ہے۔ کیونکہ ہم سیر چشم آدمی ہیں لھذٰا زیادہ انکار نہیں کرتے کہ کسی کا دل نہ دکھے اور اپنے دل پر پتھر رکھ کر پوسٹ کر ہی دیتے ہیں۔

کچھ لوگوں نے ہماری صحت کے متعلق بھی تشویش کا اظہار کیا ہے۔ ہم ان سب کے سپاس گزار ہیں۔ یہ بات بتانے کی ضرورت تو ہے نہیں کہ اتنی محنت صحت پر اثرانداز تو ہوتی ہی ہے تاہم ڈاکٹر نے ہمیں آرام کی ہدایت کی ہے اور تا حکم ثانی مزید پوسٹس سے منع کیا ہے۔۔۔۔۔ دو بوتلیں گلوکوز کی اور طاقت کے انجکشن تو کل ہی لگ گئے تھے تاہم کمزوری کی وجہ آج پتہ چلی۔

نجانے فضہ نے کیسے ہمارا کارنامہ دیکھ لیا اور ہم ان کے شکرگزار بھی ہیں کہ ہمارے اعزاز میں ایک دھاگہ بھی پرو دیا۔ ہمارے خیال میں ہماری سالگرہ کے علاوہ ہمارے متعلق یہ پہلا دھاگہ ہے سو ہمارے لئے یہ مسرت کا موقع ہے اور اس مسرت کے موقع پر ہم فضہ کو بھی خالی ہاتھ نہیں رکھیں گے۔ چنانچہ ہم یہاں آپ سب کو فضہ کر متعلق ایک راز بتاتے ہیں۔

اور وہ راز یہ ہے کہ ان کا نام فضہ ہے فضا نہیں۔ سو ہماری گزرش ہے کہ آئندہ انھیں فضا نہ لکھا جائے۔ کیونکہ یہ پاکستان کے ایک بڑے شہر کی رہایشی ہیں اور بڑے شہروں کی فضا کے متعلق آپ اچھی طرح جانتے ہیں کہ کتنی آؒودہ ہوتی ہے۔ ایسا نہ ہو کہ یہ “فضا” آپ کا جینا دشوار کر دے۔

فضہ کے اس قدر جلدی دھاگہ بنانے کا نقصان یہ ہوا کہ دو چار لوگ جو مدت سے ہماری اعزاز میں ایک دھاگہ بنانے کی آس میں بیٹھے تھے، ان کی امیدیں دم توڑ گئیں۔ ان کے ارمان تھریڈ میں بہہ گئے۔ تاہم انھیں اداس ہونے کی ضرورت نہیں۔ اگر وہ ہماری ہر سو پوسٹس پر بھی تھریڈ بنا دیں تو ہم وعدہ کرتے ہیں کہ بالکل بھی ناراض نہیں ہوں گے۔ بلکہ سو میں تو شاید دیر ہو جائے بیشک پچاس، پچیس پر بھی آپ تھریڈ بنا دیں  ہمیں کوئی اعتراض نہیں بس آپ لوگ خوش رہیں۔

 

Advertisements

اپنی رائے سے نوازیئے۔

Please log in using one of these methods to post your comment:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s